سرحد کے اُس پار کے دیہات خالی، یہاں کاروبار حیات جاری، خصوصی رپورٹ

سرحد کے اُس پار کے دیہات خالی، یہاں کاروبار حیات جاری، خصوصی رپورٹ

لاہور (آصف محمود) لائن آف کنٹرول پر پاکستان کے ساتھ چھیڑ خانی اورسرجیکل اسٹرائیک کے جھوٹے دعو ے کرنیوالا بھارت پاکستان کی طرف سے جوابی کارروائی پراتنا خوف زدہ ہے کہ بارڈرکے قریب 10 کلومیٹرتک کے علاقہ میں ایک ہزار سے زائد دیہات کو خالی کروالیا ہے لیکن دوسری طرف پاکستان کے بارڈرایریا میں رہنے والے بہادر اورجفاکش لوگ معمول کے مطابق زندگی گزاررہے ہیں۔

لاہور کے واہگہ بارڈر کے قریب واہگہ گاؤں ٹھٹھہ تارڑاں کے مکینوں کا کہنا ہے کہ وہ جنگ نہیں امن چاہتے ہیں لیکن اگردشمن نے کوئی شرارت کی تواس کا منہ توڑجواب دینے کے لئے بھی پوری طرح سے تیارہیں۔بھارت نے مشرقی پنجاب کے 6 اضلاع فیروزپور، فاضلکا، امرتسر، ترن تارن، گورداسپور اور پٹھان کوٹ کے دیہات خالی کروالئے ہیں جبکہ وہاں سکول بھی بند کئے جاچکے ہیں۔

ٹھٹھہ تارڑاں گاؤں کے رہائشئ 70 سالہ بزرگ اللہ رکھا کاکہنا تھا کہ وہ بھارت کے ساتھ لڑی جانیوالی دوجنگیں اوران کی تباہی دیکھ چکے ہیں، کوئی بھی شخص جنگ کے حق میں نہیں ہے لیکن اگر ہمسایہ ملک نے کوئی شرارت کی توہم پاک فوج سے پہلے اسے جواب دیں گے ۔ ایک اوربرزگ فرزندجٹ نے کہا بھارت کی طرف سے دی جانیوالی دھمکیاں سن کران کا خون کھول رہا ہے ، ان کے ہاتھوں میں آج بھی اتنی طاقت ہے کہ کئی دشمنوں کو سبق سکھاسکتے ہیں۔ رمضان جٹ اوراحسان جٹ کا کہنا تھا کہ ہمسایہ ملک ان خوفزدہ ہے کہ اس نے ناصرف بارڈرکے قریب اپنے دیہات خالی کروالئے ہیں بلکہ لوہے کی باڑ کی اس طرف کاشت کی گئی فصلوں کو پانی دینے والا بھی کوئی نہیں ہے۔ انہوں نے کہا ہمارے علاقوں میں بالکل سکون ہے اورکسی قسم کا کوئی ڈر خوف نظرنہیں آتا ہے ۔ جنگ ہوئی تواب بارڈرایریا کے عوام لاہورکی طرف جانے کی بجائے امرتسرکا رخ کریں گے۔ ملک کا بچہ بچہ جان قربان کرنے کو تیارہے ۔ مقامی لوگوں نے یہ بھی کہا کہ بھارتی حکومت اپنے کسانوں پر رحم کرے اور انہیں کاشت کی گئی فصلوں کوپانی دینے کی اجازت دے ۔ بعض دیہاتیوں کا کہنا تھا اگر بھارتی کسان واپس نہ آئے تو ان کی فصلوں کو وہ خود ہی کاشت کریں گے۔

citizen

دوسری طرف کشیدہ صورتحال کے بعد پنجاب رینجرزبھی پوری طرح سے مستعد اورالرٹ ہے، رینجرزکے جوان چوبیس گھنٹے وطن کی سرحدوں کی نگہبانی کررہے ہیں اوردشمن کی نقل وحرکت پر نگاہ رکھے ہوئے ہیں۔ مقامی لوگوں کے مطابق رینجرزکے اس اقدام کی وجہ سے ہی بارڈرایریا کے لوگ امن اورسکون سے زندگی گزاررہے ہیں۔