کمپیوٹر پروگرام آنکھوں کےذریعے جھوٹ کا پتا لگنا آسان ہو گیا

کمپیوٹر پروگرام آنکھوں کےذریعے جھوٹ کا پتا لگنا آسان ہو گیا

ہیوسٹن: اب کمپیوٹر پروگرام آنکھوں کو دیکھ کر  یہ بتا سکے گا کہ آیا انسان جھوٹ بول رہا ہے یا نہیں۔

آئی ڈیٹیکٹ  پروگرام کنویرس نامی کمپنی نے  بنایا ہے جو آنکھ کے رویے کا تجزیہ کرتا ہے اور بتاتا ہے کہ انسان جھوٹ بول رہا ہے کہ نہیں۔کمپنی کا دعویٰ ہے کہ ان کے اس پروگرام کو استعمال کرنا ماضی کے پولی گرافس کے مقابلے میں زیادہ آسان ہے اور یہ کم مہارت مانگتا ہے۔جمعے کو آئی ڈیٹیکٹ کے مظاہرے کے دوران پروگرام  نے امیدواروں کا صحیح تعین کیا۔

امیدواروں کے جوابات کا حساب، آنکھوں کی حرکت اور پُتلیوں کی تبدیلیوں کے ساتھ لگایا گیا۔ بنیادی طور  پر جب آپ جھوٹ بولتے ہیں تو آپ کی پُتلیوں کا سائز بدل جاتا ہے اور چھوٹا کیمرا ان تبدیلیوں  کو نوٹ کرلیتا  ہے۔

پھر پروگرام یہ اندازہ لگاتا ہے کہ امیدوار دھوکہ دے رہا ہے کہ نہیں۔اس ٹیسٹ کا دورانیہ 30منٹ کا ہے اور کمپنی کا دعویٰ ہے کہ یہ 85فیصد تک عین مطابق ہے۔آئی ڈیٹیکٹ کی قیمت بشمول سافٹ ویئر کی لائسنسنگ فیس کے تقریباً 4000$ہے۔