پنجاب حکومت کا موبائل ہیلتھ یونٹس پرائیویٹ کمپنیوں کا فیصلہ

پنجاب حکومت کا موبائل ہیلتھ یونٹس پرائیویٹ کمپنیوں کا فیصلہ

لاہور(نمائندہ تہلکہ ٹی وی ) پنجاب حکومت کا موبائل ہیلتھ یونٹس کو موثر طریقے پر چلانے میں ناکامی پر ان کو پرائیویٹ فرمز کے حوالے کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا۔

اس حوالے سے پرائیویٹ کمپنیوں سے درخواستیں طلب کر لی گئی ہیں۔ذرائع کے مطابق پنجاب حکومت نے 2010میں چھ اضلاع جن میں بہاولنگر ،ڈیرہ غازی خان ،مظفر گڑھ میانوالی ،راجن پو اور بہاولنگر کیلئے چھ مہنگے موبائل ہیلتھ یونٹس خریدے تھے۔ان موبائل ہیلتھ یونٹس میں ایک کاتون اور ایک مرد ڈاکٹر ،لیڈی ہیلتھ وزیٹر ،ڈسپنسر ،لیبارٹری ٹیکنیشن موجود ہوتے ہیں۔جو کہ دور دراز کے علاقے میں جاکر لوگوں کو علاج معالجہ فراہم کرتے ہیں۔ان موبائل ہیلتھ یونٹس میں الٹرا سائونڈ مشین ہوتی ہیں۔حکومت چھ سالوں میں ان یونٹس کو کامیاب طریقے سے چلانے ،میں ناکام ہو گئیاور اب ان کو پرائیوٹ کمپنیوں کے حوالے کا فیصلہ ہے۔