ناقص پالیسیاں، اورنج ٹرین کی لاگت میں اربوں کا اضافہ، بوجھ عوام پر

ناقص پالیسیاں، اورنج ٹرین کی لاگت میں اربوں کا اضافہ، بوجھ عوام پر

لاہور (محمد حسن رضا) اورنج لائن ٹرین منصوبہ لاگت میںاربوں روپے کا اربوں روپے کا اضافہ ہو گیا۔ ملک کے سب سے بڑے اورنج لائن ٹرین منصوبے کی مجموعی لاگت میں 4 ارب 12 کروڑ کا مزید اضافہ ہوگیا ہے، تفصیلات سامنے آگئیں۔

 حکومتی بے بسی اور حکومتی ناقص پالیسی کے باعث اربوں روپے کا مزید سرکاری خزانے پر بوجھ ڈال دیا ہے، اور اب یہ عوام کی جیبوں پر ڈاکہ ڈال کر اس منصوبے پر خرچ کئے جائیں گے۔ اورنج لائن ٹرین کے نظر ثانی پی سی ون میں حیران کن انکشافات سامنے آئے ہیں۔ ڈیڑھ سال سے ڈالر کی قدر میں 2.8روپے کا اضافہ ہونے سے دو ارب 89کروڑ روپے مزید بڑھ گئے ہیں، لیگی وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار ڈالر کی قیمت کو سنبھالا نہ دے سکے۔ ڈالر کی پرواز، معتبروزیر خزانہ کا اعزاز پانیوالے اسحاق ڈار سے بھی تیز نکلی ہے۔لاگت بڑھنے کی مکمل دستاویزات سامنے آگئیں۔

سرکاری دستاویزات کے مطابق بجلی کے تاروں، سوئی گیس، پی ٹی سی ایل و دیگر سروسز کی منتقلی مین ایک ارب تیئس کروڑ کا اضافہ ہوا ہے۔ منتقلی کےلئے اخراجات 8ارب 27کروڑ بڑھ کر 9ارب 55کروڑ 66لاکھ روپے تک پہنچ چکے ہیں۔