وکی لیکس نے اوباما کودنیا بھر میں بے نقاب کردیا

وکی لیکس نے اوباما کودنیا بھر میں بے نقاب کردیا

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک) دنیا بھر کے سفارتی راز بے نقاب کرکے تہلکہ مچانے والے وکی لیکس نے امریکی صدر باراک اوباما کو بھی معاف نہیں کیا ۔ انٹر نیٹ پر خفیہ مواد جاری کرنیوالے ادارے نے براک اوباما کی بھی خفیہ ای میلز جاری کردی ہیں۔

وکی لیکس نے دعویٰ کیا ہے کہ اوباما ٹیم نے صدارتی انتخاب سے قبل ہی اقتدار کی منتقلی کی تیاری شروع کردی تھی۔ امریکی میڈیا کے مطابق وکی لیکس نے دعویٰ کیاکہ 2008 میں براک اوباما نے انتخاب سے قبل ہی اقتدار کی تیاری شروع کردی تھی۔ اس حوالے سے معیشت و دیگر ٹیموں کو تشکیل دیا جا رہا تھا۔ 2008 میں اوباما صدارتی انتخابی مہم کے منیجر جان پڈیسٹا کی ہیک کی گئی ای میلز سے اوباما کی کم از کم پانچ ای میلز ملی ہیں۔ یہ ایل میلز خفیہ ایڈریس (اوباما ایٹ دے ریٹ آف ایمری ٹیک ڈاٹ کام) سے کی گئی تھیں۔ وکی لیکس نے سوال اٹھایا ہے کہ اوباما کو خفیہ ای میل ایڈریس استعمال کرنے کی ضرورت کیوں پیش آئی۔