اسلام آباد ہائیکورٹ نے پولیس کو تحریک انصاف کارکنوں کی گرفتاری سے روک دیا

اسلام آباد ہائیکورٹ نے پولیس کو تحریک انصاف کارکنوں کی گرفتاری سے روک دیا

اسلام آباد ( مانیٹرنگ ڈیسک)  ہائی کورٹ نے پولیس کو تحریک انصاف کے کارکنوں کی پکٹر دھکڑ سے روک دیا۔ تحریک انصاف کے وکیل کہتے ہیں قانون کے مطابق اپنا احتجاج ریکارڈ کروائیں گے اور عدالتی احکامات پر عمل بھی کریں گے۔ جسٹس شوکت صدیقی نے ریمارکس دیئے کہ عدالت اپنے حکم پر عملدرآمد کروانا جانتی ہے۔

 اسلام آباد ہائیکورٹ نے تحریک انصاف کے کارکنوں کی پکٹر دھکٹر روکنے کا حکم جاری کر دیا۔ گرفتار کارکنوں اور ان کے خلاف درج مقدمات کی تفصیلات بھی طلب کر لی گئیں۔ جسٹس شوکت صدیقی نے دوران سماعت ریمارکس دیئے کہ اسلام آباد کو تحریک انصاف بند کرے گی ناں ہی حکومت۔ گرفتاریوں کے خلاف دائر درخواست کی سماعت کے موقع پر جسٹس شوکت صدیقی نے تحریک انصاف کے وکیل سے استفسار کیا کہ پہلے یہ بتائیں کہ پرامن احتجاج کریں گے یا شہر بند کریں گے، جس پر تحریک انصاف کے وکیل نے کہا کہ قانون کے مطابق اپنا احتجاج ریکارڈ کروائیں گے اور عدالتی احکامات پر عمل کریں گے۔ جسٹس شوکت صدیقی نے ریمارکس دیئے کہ عدالت اپنے حکم پر عملدرآمد کروانا جانتی ہے۔

دوسری جانب تحریک انصاف اسلام آباد بند نہ کرنے کے فیصلے کے خلاف تاخیر سے پہنچنے پر اپیل ہی دائر نہ کر سکی۔ تحریک انصاف کے وکیل نعیم بخاری ایڈووکیٹ اسلام آباد ہائیکورٹ پہنچے تو سماعت کا وقت ختم ہو چکا تها۔ اب پیر کے روز اپیل دائر کی جائے گی۔