2 نومبر کو 2 نومبر کا کام نہیں ہونے دیں گے : مولا نا فضل الرحمان

2 نومبر کو 2 نومبر کا کام نہیں ہونے دیں گے : مولا نا فضل الرحمان

پشاور (باسط خان) جمعیت علمائے اسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ کوئی اسلام آباد کو بند کرنے اور وہاں کے لوگوں کو محصور بنانے کی بات کریں گا تو پھر حکومت کی ذمہ داری ہے کہ وہاں کے شہریوں کو تحفظ فراہم کریں ۔ کہتے ہیں کہ دو نومبر کو دو نمبر کام نہیں ہونے دیں گے

جمعیت علمائے اسلام کے مرکز میں تقریب دستاربندی سے خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان کا کنا تھا کہ دینی مدارس کو بدنام کرنے کی بات کرتا ہے تو ہمارے حکمران وکیل بن کر ان کی بات کو ٹھیک کہتے ہیں لیکن میں انہیں بتا دیتا ہوں کہ یہ مدارس ہمارے پاس امانت ہیں اور اس کا تحفظ بھی ہماری ذمہ داری ہے ۔ انھوں نے کہا کہ جو لوگ ملک میں دہشتگردی اور فساد پھیلاتے ہیں وہ ہم میں سے نہیں کسی کو گالی کا جواب گالی سے دینے کی بجائے اپنے مقاصد کے حصول کے لئے کوششیں تیز کریں ۔

مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ جو بھی اسلام آباد کو بند کرنے اور وہاں کے لوگوں کو محصور بنانے کی باتیں کرے گا تو پھر یہ ذمہ داری حکومت کی بنتی ہے کے وہاں کے باسیوں کو تحفظ فراہم کریں اگر کوئی اقتدار کو حاصل کرنا چاہتا ہے تو وہ غیر آئینی اور غیر جمہبوری راستے نا اپنائے بلکہ انتخابات کا انتظار کریں ان کا کہنا تھا کہ دو نومبر کو اسلام آباد میں کسی بھی دو نمبر کام کو نہیں ہونے دینگے