مصطفی کمال کا جنرل ورکر کنونشن سے خطاب

مصطفی کمال کا جنرل ورکر کنونشن سے خطاب

کراچی(کنول زہرا) آج کراچی کے کارکنان کا ورکر اجلاسہو۔ اجلاس میں مصطفی کمال نے خطاب کیا ۔ انکا کہنا تھا کہ ماہ کے قلیل عرصے میں کوئی پارٹی اتنی بڑی تعداد میں کارکنان کو جمع نہیں کر سکی۔

مصطفی کمال نے کہا کہ پاک سر زمین پارٹی کراچی سے نکل کر پورے پاکستان کی جماعت بن چکی۔ سندھ، پنجاب، بلوچستان، خیبر پختون خواہ گلگت بلتستان میں پارٹی کا آرگنائزنگ سسٹم موجود ہے
پاک سر زمین پارٹی کا تنظیمی ڈھانچہ پاکستان سے نکل کر دبئی، یورپ، برطانیہ، امریکہ، آسٹریلیا سمیت تک پھیل چکی ہے، اللہ کو حاظر ناظر جان کر یہ سب کو بتانا چاہتا ہوں آزمائش ختم ہوئی، کوئی دنیاوی طاقت کامیابی سے نہیں روک سکتی انکا کہنا تھا کہ پاک سر زمین پارٹی کی ترقی کی راہ میں رکاوٹ صرف ہمارے اعمال اور روئیے اور کرتوت ہوں گےاوراپنی کامیابی پر گھمنڈ اورغرور نہیں کرنا بلکہ اور جھکنا ہے، کسی کو پاک سر زمین پارٹی کے پاک دامن پر دھبہ لگانے کی اجازت نہیں دیں گے۔

مصطفیٰ کمال نے کہا کہ پستی اور گہری کھائی میں گئی قوم کو بچانے کے لئے نکلے ہو، اللہ کی ذات دلوں کے حال کو جانتی ہے، کسی مصطفٰی کمال کو خوش نہیں کرنا اللہ تعالٰی کی ذات کا خوش کرنا ہے۔ پاکستانیوں سے تالیاں بجوانے نہیں آیا، اللہ تعالٰی کی دی ہوئی عزت کی وجہ سے کشتیاں جلا کر آیا ہوں، میرے ساتھیوں تم سب ایک عظیم جدوجہد کے لیے نکلے ہو، صرف ایم پی ای ایم این اے بنانے کے لیے نہیں۔ سنا ہے ہمارے ملک میں جمہوریت ہے،  ہر جماعت اور مسلک کے لوگوں سے ملو کسی سے نفرت نہیں کرنی، سب سے محبت کرنی ہے سب سے جھک کے ملنا ہے، جمہوری لوگ مردم شماری نہیں کرا سکے، سیٹوں کی سیاست خطرہ میں پڑ جائے گی،  مردم شماری ہونے سے بہت سی پارٹیوں کی اصلیت سامنے آجائے گی، افسوس کی بات ہے بغیر مردم شماری کے بجٹ بنا کرعوام کی آنکھوں میں دھول جھونکی جاتی ہے، ہزاروں ارب روپے بغیر کسی سوچ کے بلا وجہ خرچ کیے جارہے ہیں، سپریم کورٹ بول بول کر تھک گئی، نتیجہ صفر ہے، دشمن ہماری سرحدوں پر آئے روز معصوم شہریوں کو شہید کرتا ہے، ہورے ملک میں کسی شعبے کو نہیں بخشا جارہا ہر جگہ دہشتگردی ہے، کہیں وکیل کہیں ڈاکٹر کہیں کسی اور شعبے کے بے گناہ لوگ شہید کر دیے جاتء ہیں۔